Urdu Translation of Column “Pakistan’s MQM party pressures govt, army with list of “executed”- Reuters

پاکستان کی جماعت متحدہ کا اپنے مقتول کارکنوں کی لسٹ کے ساتھ حکومت اور فوج پر دباؤ

Reuters column pic

پاکستان کی ایک بڑی سیاسی جماعت جو سب سے بڑے شہر کی نمائندہ جماعت ہے اس نے 46 افراد پر مشتعمل ایک فہرست مرتب کی ہے جس کے بارے میں اس کا دعویٰ ہے کہ ان افراد کو پیرا ملٹری رینجرز نے باقاعدہ منصوبہ بندی کرکے ماورائے عدالت قتل کیا ہے۔ اس جماعت نے پہلی بار  اس فورس پر براہ راست  منصوبہ بندی کے ساتھ ماورائے عدالت قتل کا الزام عائد کیا ہے۔

متحدہ قومی مومنٹ  نے یہ فہرست وزیر اعظم جناب نواز شریف تک پہنچانے کے لیے انکے آفس میں بھی جمع کرایا ہے، تاکہ وہ کراچی میں اس فورس اور ملٹری دونوں سے اس کے بارے میں معلوم کریں اور اس پر انکا احتساب کیا جاسکے۔

متحدہ قومی مومنٹ  نے پیرا ملٹری رینجرز پر اپنے کارکنوں کی غیر آئینی گرفتاری  کا الزام رینجرز پر اس آپریشن سے پہلے سے لگا رہی ہے جو اس نے پورٹ سٹی میں بقول رینجرز کے جرائم کے خاتمے کے لیے شروع کر رکھا ہے۔

لیکن جو فہرست ریوٹر (خبر رساں ایجنسی) کو پیش کی گئی ہے وہ پیرا ملٹر رینجرز کے اقدامات پر بہت سارے سوالات اُٹھاتا ہے؟ کیوں کہ اس میں درجنوں ایسے ماورائے عدالت قتل کے ناقابل تردید ثبوت پیش کیے گئے ہیں۔

لیکن نہ تو رینجرز اور نہ ہی پاکستانی ملٹری اسٹیبلشمنٹ نے  2013 میں کراچی میں ہر لمحہ بڑھتی ہوئی مجرمانہ سرگرمیوں کے خلاف ہونے والے  آپریشن  میں غیر قانونی اقدامات  اور  ماؤرائے عدالت قتل پر ریوٹر کی جانب سے اُٹھائے گئے سوالوں کا جواب  نہیں دیا ہے۔

جب انہی سوالوں کو پولیس کے ترجمان قمر زیب ستی سے پوچھا گیا تو انھوں نے بھی کوئی جواب دینے سے گریز کیا۔ البتہ انکا کہنا تھا کہ ان میں سے کچھ ماؤرائے عدالت قتل کو سپریم کورٹ کی جانب سے قائم کیے جانے والا ڈائریکٹریٹ تحقیق کر رہا ہے۔

وزیر اطلاعات پاکستان جناب پرویز رشید نے اس بات کا انکار کیا کہ متحدہ قومی مومنٹ کو علیحدہ کرکے نشانہ بنایا جارہا ہے۔ انکا کہنا تھا کہ ” کراچی آپریشن صرف جرائم پیشہ افراد کے خلاف ہے کسی سیاسی جماعت کے خلاف نہیں۔ وزیر اعظم نے گریفانس ریڈریسل کمیٹی بنا دی ہے۔ متحدہ کی شکایت سیاسی نوعیت کی ہیں اور انھیں سیاسی طور پر ہی حل کیا جائے گا۔”

کراچی پولیس کے موجودہ بہت ہی سینئر افسران نے اس بات کو تسلیم کیا ہے کہ  کراچی جس کو متحدہ نے ایک مافیا کی طرح چلایا اس میں اس آپریشن کے دوران ماؤرائے عدالت قتل کیا جارہا ہے۔

الزامات کی  تجارت:

کراچی میں جاری آپریش کے نتیجے میں جو قتل کی وارداتوں میں کمی واقع ہوئی ہے اس وجہ سے علاقائی بزنس مین اس کی حمایت کرتے ہیں۔ اس آپریشن کے دوران رینجرز جس طرح کے غیر قانونی  اور غیر انسانی اقدامات کر رہی ہے اس پر کوئی روک ٹوک کا نہ ہونا اس بات کی نشاندہی کرتا ہے کہ اس فورس کو ہر طرح کےغیر انسانی اور غیر قانونی اقدامات پر تحفظ حاصل ہے۔

اس طرح کے اقدامات پر رینجرز کو حاصل تحفظ نے خود نواز شریف کی سویلین عملداری کو بہت کمزور کر دیا ہے جن کی بڑی جدوجہد تھی کہ وہ ملٹری ایسٹیبلشمنٹ پر سویلین عملداری کو مضبوط کریں۔

اس میں کوئی شک نہیں کہ پاکستان کی آذادی سے لیکر آج تک اس کی عمر کا آدھا حصہ اس پر ملٹری قوتوں نے قبضہ کیے رکھا ہے۔ نواز شریف پہلی بار ایک سویلین حکومت کے بعد دوسری سویلیں حکومت آنے کے بعد منتخب ہوئے ہیں۔

سینئر رہنما جناب ندیم نصرت کا کہنا تھا کہ ماورائے عدالت قتل ہونے والے اس فہرست میں شامل تمام 46 افراد کو رینجرز اور پولیس نے یا تو جھوٹے مقابلوں یا پھر گھر سے گرفتار کرکے لاپتہ کردیا گیا اور پھر ان سب کی لاشیں کچھ دنوں یا  ہفتوں کے بعد مختلف جگہوں پر پھینک دی گئیں۔

ندیم نصرت کا یہ بھی کہنا تھا کہ ” انکے پیخانے کے سوراخوں میں پیٹرول ڈالے گئے، انھیں تیزاب سے جلایا  گیا ۔ انکے نازک اور جنسی اعضاء کو کرنٹ لگا یا گیا اور بعد میں انھیں بھاری ہتھیاروں سے قریب سے گولیاں ماری گئیں”-

اقوام متحدہ کے زبردستی یا مرضی کے بغیر لاپتہ کیے جانے والے ورکنگ گروپ نے  متحدہ قومی مومنٹ کے 35 لاپتہ کارکنوں کی فہرست  کو مئی کے مہینے اور 20 اگست کو دوبارہ حکومت پاکستان کو جواب دینے کے لیے بھیجا ، جس میں رینجرز کے اقدامات پر سوالات اُٹھائے گئے اور بتایا گیا کہ ان تمام افراد کو رینجرز ہی نے ایک ہی طرح کے انداز سے اغواء کیا اور پھر لاپتہ کردیا۔

اپنے طور پر قانون نافذ کرنے والے ادارے اور کچھ شہری متحدہ قومی مومنٹ پر ایسا گروہ کے طور پر عمل کرنے کا الزام لگاتے ہیں جو مخالفین کا اغواء کرتی ہے ، انھیں ٹارچر کرتی ہے اور کچھ کو تو قتل بھی کردیتی ہے۔ اور اپنے مقصد کے حصول کے لیے سارے شہر کو ہڑتال کی کال دیکر مفلوج کردیتی ہے۔

متحدہ قومی مومنٹ ایسے الزامات سے انکار کرتی ہے اور اسکا کہنا ہے کہ اس کو ظلم کا شکار بنایا جارہا ہے۔ اس جماعت کے کچھ ممبران میں یہ خوف بھی ہے کہ ملٹری ایسٹیبلشمنٹ اس کو کمزور کرکے ان جماعتوں کے لیے جگہ بنا رہی ہے جو ملٹری ایسٹیبلشمنٹ کے ہی ہمدرد ہیں یا ملٹری اسٹیبلشمنٹ کے ساتھ ہیں۔

ریوٹر نے ماؤرائے عدالت قتل کیے گئے افراد کی اس فہرست میں سے کئی گھرانوں سے بات کیا، جن کے بارے میں مقتدر حلقوں کا کہنا ہے کہ وہ مقابلے میں مارئے گئے لیکن ورثہ کا کہنا ہے کہ انھیں یقین ہے کہ ان افراد کو ماؤرائے عدالت ہی قتل کیا گیا ہے۔

ان الزامات کے باوجود پاکستان کے معاشی شہہ رگ اور گہرے پانی کے سمندر والے شہر میں رینجرز کے آپریشن پر اس کو کچھ شہریوں کی جانب سے ہمایت  بھی حاصل ہے۔

اسی مہینے نواز شریف نے بھی بڑے پیمانے پر جاری اس آپریشن کی ہمایت کا اعلان کیا ہے۔

ٹیکسٹائل کی صنعت سے وابستہ ایک بڑے صنعت کار نے اپنا نام نہ بتانے کی شرط پر کہا کراچی کو سو سال کے لیے رینجرز کے حوالے کردیں تاکہ کم از کم ہم سکون سے سو تو سکیں۔

Pakistan’s MQM party pressures govt, army with list of “executed”

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s